بچے اور خاندان

ازدواجی زندگی میں حقوق و فرائض

Brudepar

عائلی قانون سے اقتباس

  • 18 سال کی عمر سے زیادہ کےتمام افراد جو پہلے شادی شدہ نہیں اور جن کا ناروے میں قیام قانونی ہے وہ یہاں شادی کر سکتے ہیں۔
  • تمام شادیاں رضامندی سے ہونی چاہئیں۔ عورتوں اور مردوں کو خود اپنی مرضی سے اپنے شریکِ حیات کے انتخاب کا ایک جیسا حق ہے۔ سزا کے قانون کے مطابق اگر کوئی تشدّد، آزادی سلب کرنے، دباؤ یا دھمکا نے سے کسی کو شادی پر مجبور کرے تو اسے چھ سال تک جیل کی سزا دی جا سکتی ہے۔ تعاون کرنے والوں کو بھی ایسی ہی سزا مل سکتی ہے۔
  • اگر کوئی شخص یہ فیصلہ کر لے کہ وہ اپنے شریکِ حیات کے ساتھ مزید نہیں رہ سکتا / سکتی تو علیٰحدگی کا مطالبہ کر سکتے ہیں۔ ایک سال علیٰحدہ رہنے کے بعد طلاق لے سکتے ہیں ۔ اگرعلیٰحدگی کا مطالبہ نہ کیا جائے لیکن دو سال تک ایک دوسرے سے علیٰحدہ رہیں تب بھی طلاق لے سکتے ہیں۔ عورتیں اور مرد علیٰحدگی کے مطالبے اور طلاق کے لئے مساوی حق رکھتے ہیں۔
  • کوئی فرد علیٰحدگی کے بغیرطلاق کا مطالبہ کر سکتا /سکتی ہے اگر شریکِ حیات نے اسے یا بچوں کو قتل کرنے کی کوشش کی ، تشدّد، بہت بد سلوکی یا خوفزدہ کیا ہو۔ ایک شریکِ حیات جبری شادی کی صورت میں بھی طلاق کا مطالبہ کرسکتی / سکتا ہے۔ اقامتی اجازت ناموں سے متعلق بھی حقوق ہیں اگر انہی وجوہات کی بنا ‎ء پر شادی کا خاتمہ ہو جا ئے ۔
  • دونوں شریکِ حیات پر خاندان کی کفالت اوردیکھ بھال کی مشترکہ ذمہ داری عائد ہوتی ہے۔ وہ مشترکہ معاشی ذمہ داری اور ایسے تمام معاملات میں بھی مشترکہ ذمہ داری رکھتے ہیں جو خاندان کی بہتر زندگی کے لئے ضروری ہیں۔ لیکن وہ مختلف طریقوں سے ایسا کر سکتے ہیں۔ ایسا کمائی کرنے، گھر کے کام کاج، بچوں کی نگہداشت یا دوسری صورتوں میں ہو سکتا ہے۔ بعض صورتوں میں ایک شریکِ حیات دوسرے سے ضروری اخراجات کے لئے پیسوں کا مطالبہ کر سکتا / سکتی ہے۔ عائلی قانون 39§ کے مطابق شریکِ حیات ایک دوسرے کو اپنی معیشت کے بارے میں معلومات دینے کے پابند ہیں ۔ ایک شریکِ حیات دوسرے سے جیسےٹیکس کا گوشوارہ یا بینک اکاؤنٹس کی رسیدیں دیکھنے کا تقاضا کر سکتا / سکتی ہے۔
  • شادی کے بعد کون کس چیز کا مالک ہے؟ شادی سے پہلے جو کسی کی ملکیت تھی شادی کے بعد بھی وہ اسی کی ملکیت ہے۔ اسی طرح جو کسی کی وراثتی ملکیت ہے یا شادی کے بعد جو چیز تحفتاً ملی ہے اور جو کچھ فرد نے خود خریدا ہے وہ بھی اس کی ملکیت ہے۔ جو ایک فرد کی ملکیت ہے وہ آدمی شریکِ حیات سے رکاوٹ کے بغیر بیچ سکتے ہیں یا دوسروں کو دے سکتے ہیں۔ جو چیزیں دونوں شریکِ حیات اکٹھی خریدتے ہیں یا گھر کے لئے جو ہو وہ ان کی مشترکہ ملکیت ہے۔

حقائق